Quettaweb.com
Welcome
Login / Register

سابق وزیر اعلی بلوچستان ڈاکٹر عبدالمالک بلوچ کے سالے سیف الرحمن جاں بحق ۔۔۔ ذرائع

 

سابق وزیر اعلیٰ بلوچستان ڈاکٹر عبدالمالک کے سالے سیف الدین کی لاش دن 3 بجے گوادر میں کوہ باتیل کے مغرب میں سیاحتی مقام گراب کے قریب سمندر سے ملی ہے ۔ باوثوق ذرائع کے مطابق وہ آج صبح گوادر سے کراچی جانے والے تھے لیکن تقریباً 8 گھنٹے رابطہ منقطع رہنے کی وجہ سے ان کے خاندان نے اسکی گاڑی میں نصب سٹلائیٹ ٹریکنگ سسٹم کے ذریعے اسکی موجودگی کے مقام کا پتہ چلانے کے لیے ٹریکنگ کمپنی سے رابطہ کیا تو پتہ چلا ہے کہ اس کی گاڑی کوہ باتیل کے مغربی علاقے گراب کے قریب سمندر کے اندر موجود ہے ۔۔۔ اس کے بعد جب گوادر میں اسی مقام پر لوگ بھیجے گئے تو گراب کے قریب اسکی لاش سمندری کی پانی سے ملا۔۔۔ تاہم اس کی گاڑی تاحال اسی مقام پر سمندر کے اندر موجود ہے اور پولیس گاڑی کو سمندر سے نکالنے کے لیے ممکنہ طریقوں پر ٖور کر رہی ہے ۔
گراب کے مقام پر ایک جگہ ایک گاڑی کے ٹائروں کے نشان ہیں جو سیدھا جاکر سمندر میں گری ہے ۔۔ ٹائروں کے نشانات سے پتہ چلتا ہے کہ سمندر میں گرنے سے قبل کم سے کم دو مقاموں پر گاڑی کو کافی تیز ویل دی گئی ہے ۔۔۔ پولیس واقع کی تحقیقات کر رہئ ہے اور پولیس حکام کے مطابق گاڑی سمندر سے نکالنے تک واقع پر اٹھنے والے سوالوں کا جواب دینا قبل از وقت ہے ۔
سیف الدین گوادر ڈیولوپمنٹ اتھارٹی میں ایگزیکیٹیو انجینئر کے عہدے پر فائز تھے

loading...

Post your comment

Comments

Be the first to comment

Related Articles

RSS
loading...